طالبان نے غیرملکی پرچموں میں لپٹے تابوتوں کا جلوس نکالا

کابل: افغانستان میں طالبان کے حامیوں نے امریکا، برطانیہ، فرانس، اور نیٹو کے جھنڈوں سے لپٹے علامتی تابوتوں کا فرضی جنازہ نکالا۔

عالمی خبر رساں ادارے کے مطابق افغانستان کے شہر خوست میں طالبان کے پرچم لہراتے بندوق بردار ہجوم نے نیٹو اور غیر ملکی افواج کا فرضی جنازہ نکالا۔ طالبان کے حامیوں نے امریکا، برطانیہ، فرانس اور نیٹو کے جھنڈوں سے لپٹے تابوتوں کو کندھوں پر اُٹھا کر جلوس نکالا اور فرضی طور پر آخری رسومات ادا کیں۔

taliban leader
جلوس سے خطاب کرتے ہوئے مقامی طالبان اہلکار قاری سعید خوستی نے کہا کہ 31 اگست ہمارا رسمی یوم آزادی ہے۔ اس دن امریکی قابض افواج اور نیٹو افواج ملک چھوڑ کر بھاگ گئیں اور ہم ان کی آخری رسومات ادا کر رہے ہیں۔ اس موقع پر طالبان کے حامیوں نے شدید نعرے بازی اور ہوائی فائرنگ بھی کی۔

واضح رہے کہ افغانستان سے امریکا کا انخلا گزشتہ روز مکمل ہوگیا۔ امریکا کے آخری فوجی کے روانہ ہوتے ہی طالبان سجدے میں گر گئے اور اپنی سرزمین کے غیرملکیوں کے قبضے سے چھوٹنے کی خوشی میں ہوائی فائرنگ کی تھی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں